Skip to content Skip to sidebar Skip to footer

شیخ ابراھیم بن موسی الفیومیؒ

بقلم :د/ محمد الراسخ ازھری

آ پ مالکی فقہ کے مصری فقیہ ہیں۔ آپ سلسلہ اساتذہ جامعہ ازہر کے چھٹے امام ہیں۔ آپ کی ولادت الفیوم شہر میں سن 1062ھ/1652ء میں ہوئی، جبکہ آپ کی وفات 1137ھ/1724ء میں ہوئی۔ آپ عمرِ شباب میں ہی شہرِ الفیوم سے قاہرہ منتقل ہوئے  جس کا مقصد ازہر میں تعلیم حاصل کرنا تھا، اس وقت کے مقرر نصاب کی تکمیل کی جن میں تفسیر حدیث ، توحید، تصور، فقہ، اصولِ فقہ وغیرہ کی تعلیم شیوخِ ازہر سے پڑھے اور ان سے علم کے ساتھ اخلاقِ حسنہ بھی سیکھے۔ ان علماء میں شیخ محمد الخراشی بھی شامل تھے جو ابتدائی شیوخ جامعہ تھے۔

آپ نے شیخ محمد شنن کے بعد سن 1133ھ/1720ء میں شیخ الجامعہ کے منصب کی ذمہ داریاں سنبھالیں۔ آپ تدریس میں مہارت رکھتے تھے جس کی وجہ سے کئی اہلِ علم آپ سے استفادہ علمی کے لئےحاضر ہوتے تھے۔ آپ اپنے درس کے اختتام پر خلاصہ درس بھی پیش کرتے تھے۔ تب تک درس ختم نہ کرتے جب تک طلبہ مطمئن نہ ہوجائیں۔

آپ درس وتدریس میں قوی مہارت رکھتے تھے۔ آپ درس وتدریس میں اپنے استاذ الخراشی کے منہج کو اختیار کئے ہوئے تھے۔

آپ کی مؤلفہ کتب میں شرح المقدمہ العزیہ للجماعہ الازھریہ فی فن الصرف ہے جو دو بڑی جلدوں میں ہے۔

آپ کی وفات سن 1137ھ میں ہوئی آپ اس وقت تقریبا 75 سال کی عمر کے تھے اور آپ مالکی فقہ کے شیخ کی سند رکھتے تھے۔

Spread the love
Show CommentsClose Comments

Leave a comment