Skip to content Skip to sidebar Skip to footer

اسلام کا اِنسانی زندگی کی حمایت اور حفاظت کے بارے میں منھج

ڈاکٹر محمد عبد الوہاب الراسخ

ترجمۃ ڈاکٹر احمد شبل

ہمارے دین حنیف  نے انسانی جان کے لیے ایک خاص حرمت بنائی ہے اور اسلامی شریعت اُس کی حفاظت کرتی ہے۔ اور اس کا مطلب یہ ہے کہ یہ انسانی  حقوق میں سے ہے کہ انسان کا ایک ذاتی مسکن ہو، جس میں وہ اپنے اہل خانہ کے ساتھ خلوت اختیار کرے اور کوئی بھی اُس میں مداخلت نہ کرے۔

اور اسی کے لیے شریعت نے انسان کی خاص زندگی کی حفاظت  کے لیے ایک منھج رکھا ہے اس کا سب سے بنیادی مقصد انسان کی عزت کی حفاظت کرنا ہے کیوں کہ اسلام عفت، پاکدامنی اور پاکیزگی کا دین ہے اور بے شک اسلام نے انسان کی عزت کی حفاظت کی ہے جیسے کہ اُس کے نفس اور مال کی حفاظت کی ہے۔ جیسے کہ نکاح انسان کی رذیل کاموں کا مرتکب ہونے سے حفاظت کرتا ہے۔

نکاح ہمیشہ ثابت ہوتا ہے اور اس میں استقرار پایا جاتا ہے اسی وجہ سے شادی حکم کے ساتھ زنا کو حرام قرار دیا گیا ہے۔

انسان کی عزت کی حفاظت کے لیے آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے انسان کی جاسوسی کرنے سے منع فرمایا ہے۔

بعض لوگوں کا عزت پر حملے کرنا، اور معاشرے میں فواحش پھیلانے پر اسلام نے قذف کا حکم مقرر کر دیا ہے۔

اسی طرح اس منھج کی خصوصیات میں سے یہ بھی ہے کہ اسلام نے انسان کی خصوصی زندگی کے لیے مسکن، عزت کی حرمت اور آداب اور اخلاق سے متعلق قوانین بتائے ہیں جو انسان کے گھر کی حفاظت کرتے ہیں اور یہ بھی حکم دیا ہے کہ گھر کے مالک کی اجازت کے بغیر گھر میں داخلہ نہیں ہونا چاہیے۔

Spread the love
Show CommentsClose Comments

Leave a comment