Skip to content Skip to sidebar Skip to footer

خواتین کے لیے اسلام کی عزت کا ایک مظھر

ڈاکٹر  : منی غالی

ترجمۃ ڈاکٹر :احمد شبل

بچی کی خصوصیات : عزت، احترام، اور خیرات کے معاملے میں پہلے حصے میں ہم نے ذکر کیا کہ اللہ تعالی نے  لڑکیوں کے ساتھ حسن سلوک کا حکم دیا۔۔

 اوراسکا ثبوت متعدد نصوص میں سنت نبوی سے تخصيص کرنا ہے۔۔۔

اج ہم احادیث مبارکہ میں احسان کے بارے میں بات کریں گے۔۔

– احسان سے تین چیزیں مراد ہیں :

۱ : پہلا معاملہ صحبت کا احسان کرنا ۔۔۔

اس کا مطلب ہے کہ لڑکی کا نفسیاتی خیال رکھنا۔,,مہربانی اور نرمی کے لحاظ سے اور دل کی ضرورتوں کے لحاظ سے اس کے ساتھ ہمدردی کرنا،اسے شیرخوری کے ساتھ گلے لگانا،اس کے ساتھ بیٹھنا،اس کی طرف دیکھ کر مسکرانا،اسکے ساتھ باتیں کرنا،اسی طرح والرین کو اسکی ضروریات کو جانچنا(دیکھنا)،اور اسکے مسائل کو حل کرنا۔۔۔

کیا اپ کو رسول اللہ صل اللہ علیہ وسلم کی بیٹیوں کا یہ نرم بیان نظر نھیں اتا۔۔؟؟

اگلے مضمون میں ہم لڑکیوں کے ساتھ احسان  کے مزید معانی بیان کرینگے، ان شاء اللہ۔

  اپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا : لڑکیوں سے نفرت نا کرو، کیونکہ وہ بہت ملنسار ہوتی ہیں ۔ (احمد اور طبرانی نے روایت کیا ہے۔۔

 فالمئونسات :  يعني انسات یہ جمع ہے آنسة    کی یہ اس لڑکی کو کہتے ہیں جو پاک نفس حال ہو۔۔

والغالیات : یہ جمع ہے الغالية کی۔

اس کا معنی ہے عزیز یا قیمتی۔۔

اگلے مضمون میں ہم بیٹیوں کے ساتھ احسان  کے مزید معانی بیان کرینگے، ان شاء اللہ۔

Spread the love
Show CommentsClose Comments

Leave a comment